farhan ali qadri
Home | Video | Audio | Albums | Latest Album | Gallery | Forum | Guest Book | Search | Tell A Friend | Contact
Title Bookmark and Share farhan ali qadri


Farhan Ali Qadri - ماں تیرے پیار کا حق ہم سے ادا کیا ہو گا
        Urdu Lyric
  Audio  Roman  Hindi  Urdu

ماں تیرے پیار کا حق ہم سے ادا کیا ہو گا

ماں تیرے پیار کا حق ہم سے ادا کیا ہو گا
ماں میری ماں
تو جو ناراض ہو خوش ہم سے خُدا کیا ہو گا
تو نے اولاد پہ کیا کُچھ نہیں قربان کیا
اپنی نیندیں ہمیں دیں اپنا وہ سُکھ چین دیا
لوگ کرتے تھے اگر تجھ سے شکایت میری
جان پر کھیل کہ کرتی تھی حفاظت میری
جب کوئی مجھ کو ستائے تو بگڑ جاتی تھی
میری خاطر کبھی جھگڑے پہ اتر جاتی تھی
میری سانسوں میں تو موجود ہے خوشبو بن کر
میری راتوںمیں چمکتی ہے تو جگنو بن کر
تیرا دل توڑ کے بیٹوں کا بھلا کیا ہو گا
ماں تیرے پیار کا حق ہم سے ادا کیا ہو گا
یاد آتی ہیں ابھی تک مُجھے باتیں تیری
میرے رونے سے چھلک جاتی تھیں آنکھیں تیری
تو مُجھے روتا ہوا دیکھ کے رو دیتی تھی
اپنا سُکھ چین میرے واسطے کھو دیتی تھی
پھر دعائیں مجھے دے دے میں سنور جاؤں گا
تو یونہی روٹھی رہے گی تو میں مر جاؤں گا
ہو گا احسان گلے بڑھ کے لگا لے مُجھ کو
اپنی ممتا بھری جنت میں چھپا لے مُجھ کو
یہی اک راستہ اور اس کے سوا کیا ہو گا
ماں تیرے پیار کا حق ہم سے ادا کیا ہو گا
تیری عظمت کو کیا بڑھ کے فرشتوں نےطواف
اور قدم میں نے اٹھائے تیری مرضی کے خلاف
کتنا بد بخت ہوں فرمانِ خُدا بھول گیا
میں جواں ہوتے ہی احسان تیرا بھول گیا
جانتا ہوں کہ خطا کار گناہ گار ہوں میں
تو خفا ہے تو مصیبت میں گرفتار ہوں میں
معاف کردے مجھےپھر بڑھ کے سہارا دے دے
ماں میری ڈوبتی کشتی کو کنارہ دے دے
ورنہ مجھ جیسا گناہ گارکوئی کیاہو گا
ماں تیرے پیار کا حق ہم سے ادا کیا ہو گا
لوگ اوروں کے لیے ماں کو بھلا دیتے ہیں
اُس کے جذبات کو سولی پہ چڑھا دیتے ہیں
بوڑھے ماں باپ کے جو کام نہیں آئے گا
اپنی اولاد سے وہ اس کا صلہ پائے گا
یہ اگر بچھڑے تو پھر ہاتھ کہاں آئیں گے
رحمتوں کے لیے سوغات کہاں پائیں گے
ہاں ابھی وقت ہے ماں باپ کی خدمت کر لو
نیکیاں لوٹ لو اور خوشیوں سے دامن بھر لو
جائے گا بس وہی جنت میں بھی جو ماں کا ہو گا
ماں تیرے پیار کا حق ہم سے ادا کیا ہو گا
واسطہ آدم و حوا کا تجھے دیتا ہوں
واسطہ شاہ مدینہؐ کا تجھے دیتا ہوں
واسطہ دیتا ہوں حیدرؓ کی شجاعت کا تجھے
واسطہ فاطمہ زھرا کی عبادت کا تجھے
تو جو خوش ہو گی تو خوش ہوں گے حُسین اور حسن
ورنہ ویرانہ رہے گا میرے جیون کا چمن
اے میری ماں تو میرا دودھ نہ بخشے گی اگر
آگ دوزخ کی جلائے گی مجھے رہ رہ کر
بعد مرنے کے ذرا سوچ میرا کیا ہو گا
ماں تیرے پیار کا حق ہم سے ادا کیا ہو گا
ماں کا دل ٹوٹے تو آواز خُدا تک پہنچے
یہ جو روئے تو فرشتوں کو بھی رونا آئے
ماں کے دُکھ درد کو بیٹا نہ اگر سمجھے گا
اُس کو جنت میں خُدا بھی نہیں جانے دے گا
میرے آقا نہیں دیں گے اُسے جامِ کوثر
رات دن برسے گی اللہ کی لعنت اس پر
چاہے حافظ کہ ہو حاجی یا نمازی عالم
ایسے بیٹوں سے ہوخُدا کیسےہو راضی عالمؔ
جو بھلائی نہ کرے گا تو بھلا کیا ہو گا
ماں تیرے پیار کا حق ہم سے ادا کیا ہو گا
ماں میری ماں


Copyright © 2007 - 2017 - Powered by Net is Host